International

ویتنام کے ارب پتی ٹرونگ مائی لان کو 44 بلین ڈالر کے فراڈ کے جرم میں سزائے موت

57views

ویتنام میں اب تک کے سب سے بڑے مقدمے کی سماعت میں ایک 67 سالہ ویتنامی ارب پتی کو جمعرات کو ہو چی منہ سٹی کی عدالت میں 11 سال کے عرصے میں ملک کے سب سے بڑے بینکوں میں سے ایک کو لوٹنے کے جرم میں موت کی سزا سنائی گئی۔ یہ دنیا میں اب تک کی گئی سب سے بڑا بینک فراڈ میں سے ایک ہے۔

یہ ایک نادر فیصلہ ہے اور وہ ویتنام کی ان چند خواتین میں سے ایک ہیں جنہیں موت کی سزا سنائی گئی ہے۔ یہ فیصلہ دھوکہ دہی کی ایک حیران کن سطح کو ظاہر کرتا ہے۔ ٹرونگ مائی لان کو سائگون کمرشل بینک سے 44 بلین ڈالر کا قرضہ لینے کا مجرم قرار دیا گیا تھا۔ فیصلے کے مطابق انہیں 27 بلین ڈالر واپس کرنا ہوں گے، یہ رقم جو استغاثہ نے کہا ہے کہ وہ کبھی واپس نہیں کی جائے گی۔ تاہم، کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ سزائے موت غبن کیے گئے کچھ اربوں کی واپسی کی حوصلہ افزائی کا ایک طریقہ ہے۔

ایک کمیونسٹ اہلکار نے بتایا کہ 2,700 لوگوں کو گواہی دینے کے لیے بلایا گیا تھا، جن میں 10 ریاستی استغاثہ اور تقریباً 200 وکلاء شامل تھے۔ ثبوت 104 ڈبوں میں تھے جن کا وزن کل چھ ٹن تھا۔ ترونگ مائی لان کے ساتھ 85 مدعا علیہان کے خلاف مقدمہ چلایا گیا، جنہوں نے الزامات سے انکار کیا۔ڈیوڈ براؤن، جو ویتنام میں وسیع تجربہ رکھنے والے امریکی محکمہ خارجہ کے ایک ریٹائرڈ اہلکار ہیں، نے کہاکہ “میرے خیال میں کمیونسٹ دور میں اس طرح کاٹرائل کبھی نہیں ہوا۔‘‘

Follow us on Google News
Jadeed Bharat
www.jadeedbharat.com – The site publishes reliable news from around the world to the public, the website presents timely news on politics, views, commentary, campus, business, sports, entertainment, technology and world news.