International

یورپ کے مختلف ممالک میں شدید سردی کی لہر، برفباری سے معمولات زندگی درہم برہم

88views

برسلز: یورپ کے کئی ممالک میں شدید برف باری اور بارش کے باعث صورتحال ابتر ہو گئی ہے۔ ان انتہائی موسمی حالات کی وجہ سے پروازیں منسوخ یا تاخیر کا شکار ہو گئیں اور سڑکوں پر ٹریفک میں خلل پڑا ہے۔ خبر رساں ایجنسی شنہوا کے مطابق، بیلجیئم میں بدھ کو سہ پہر 3:20 پر برسلز کے ہوائی اڈے سے روانگی کو عارضی طور پر روک دیا گیا کیونکہ کارکنوں کو رن وے سے برف ہٹانے کی ضرورت تھی۔

ہوائی اڈے کے حکام نے بتایا کہ زیادہ تر پروازیں تقریباً ایک گھنٹہ تاخیر کا شکار ہوئیں اور کچھ منسوخ کر دی گئیں، جن میں فرینکفرٹ اور میونخ کی پروازیں بھی شامل ہیں۔ برسلز میں شدید برف باری کی وجہ سے برسلز رنگ پر ٹریفک جام ہو گیا۔

شدید موسمی حالات کی وجہ سے بیلجیئم کا ٹرانسپورٹ این کمیون (ٹی ای سی) نیٹ ورک بھی متاثر ہوا۔ لیج اور چارلیروئی میں، بدھ کو زیادہ تر بسیں سروس سے باہر رہیں۔ بیلجیئم میں بدھ کو سردی کی لہر تھی اور درجہ حرارت صفر ڈگری سیلسیس سے نیچے چلا گیا تھا۔

رائل میٹرولوجیکل انسٹی ٹیوٹ کی پیشن گوئی کے مطابق اس ہفتے کے آخر میں درجہ حرارت منفی 10 ڈگری سینٹی گریڈ یا اس سے بھی کم ہو جائے گا۔ پڑوسی ملک نیدرلینڈز میں بھی، موسمیاتی ادارے کے این ایم آئی نے برف باری اور پھسلن کی وجہ سے ملک کے کئی حصوں کے لیے یلو کوڈ جاری کیا ہے۔

ملک کے جنوب مشرق میں واقع صوبے لِمبرگ میں شدید برف باری ہوئی ہے جس کے باعث شاہراہوں پر طویل ٹریفک جام ہو گیا ہے۔ مقامی حکام نے گاڑی چلانے والوں کو ہائی ویز سے گریز کرنے کی فوری کال جاری کی ہے۔ کے این ایم آئی نے کہا کہ لمبرگ میں 15 سینٹی میٹر تک برف باری جاری رہنے کی توقع ہے۔

جرمنی کی نیشنل میٹرولوجیکل سروس (ڈی ڈبلیو ڈی) نے وسطی اور جنوبی علاقوں میں شدید برف باری کے ساتھ جزوی طور پر شدید موسمی حالات سے خبردار کیا ہے۔ یہ سلسلہ جمعرات تک جاری رہے گا۔ ملک کے سب سے بڑے ہوائی اڈے فرینکفرٹ پر 600 سے زائد پروازوں کو منسوخ کرنا پڑا اور تمام فضائی ٹریفک کو روک دیا گیا۔

مقامی میڈیا نے بتایا کہ فرینکفرٹ میں ٹیک آف اس لیے روک دیا گیا کیونکہ طیارے کو برف سے محفوظ طریقے سے نہیں ہٹایا جا سکتا تھا، اور مکمل طور پر بھرے ہوئے ریمپ نے لینڈنگ کو بھی ناممکن بنا دیا تھا۔ جرمنی کے جنوب میں میونخ ہوائی اڈے پر کچھ 254 پروازیں منسوخ ہونے کی توقع ہے۔ آپریٹر ڈوئچے بان کی جانب سے علاقائی اور لمبی دوری کی لائنوں پر ٹرینوں کی منسوخی اور تاخیر کی وارننگ کے ساتھ ریل آپریشن بھی محدود کر دیا گیا تھا۔

احتیاط کے طور پر آئی سی ای ہائی اسپیڈ ٹرینوں کی زیادہ سے زیادہ رفتار کو کم کر کے 200 کلومیٹر فی گھنٹہ کر دیا گیا۔ برف باری اور برفیلی سڑکوں کی وجہ سے کئی راستوں پر حادثات اور ٹریفک جام ہو گیا ہے جس میں متعدد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاع ہے۔ جرمن میڈیا رپورٹس کے مطابق ایک ٹرک سڑک سے ہٹ کر کریش بیریئر سے ٹکرانے کے بعد ہائی وے کو مکمل طور پر بند کرنا پڑا۔

شدید برف باری نے شمالی یورپ میں بھی تباہی مچا دی، اوسلو کے مرکزی ہوائی اڈے کو بدھ کی سہ پہر کو بند کر دیا گیا۔ نارویجن میٹرولوجیکل انسٹی ٹیوٹ نے اوسلو سمیت مشرقی ساحلی علاقوں میں بہت زیادہ برف باری اور تیز ہواؤں سے خبردار کیا اور کہا کہ شدید موسمی حالات جاری رہنے کی توقع ہے۔ ناروے کے ریلوے آپریٹر بان نور نے اعلان کیا ہے کہ مشرقی ناروے میں تمام ٹرین خدمات اگلے اطلاع تک منسوخ کر دی گئی ہیں۔

پبلک ٹرانسپورٹ آپریٹر روٹر نے بسوں، سب ویز اور فیریز کو متاثر کرنے والی اہم تاخیر اور منسوخی کی اطلاع دی۔ بدھ کی سہ پہر ملک کے بیشتر حصوں سے ٹکرانے والے برفانی طوفان کی وجہ سے سویڈش حکام بھی ہائی الرٹ پر ہیں۔ صبح کے وقت شدید برف باری کی وجہ سے ایک جیٹ لائنر گوتھنبرگ کے ہوائی اڈے پر ٹیکسی وے سے اتر گیا اور جنوب مغربی علاقے میں کئی سڑکیں بلاک ہو گئیں۔

Follow us on Google News