West Bengal

کلکتہ ہائی کورٹ کے سابق جسٹس ابھیجیت گنگوپادھیائے کا استعفی، بی جے پی میں شمولیت اختیار کریں گے

71views

کولکاتا: مغربی بنگال میں، کلکتہ ہائی کورٹ کے سابق جسٹس ابھیجیت گنگوپادھیائے نے واضح کیا کہ وہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کا حصہ بنیں گے۔ انہوں نے منگل (5 مارچ 2024) کو ریاستی راجدھانی کولکاتا میں بتایا کہ 7 مارچ 2024 کی دوپہر کو ایک پروگرام کا انعقاد کیا جا سکتا ہے، جس میں وہ بی جے پی میں شامل ہوں گے۔

خیال رہے کہ جسٹس ابھیجیت گنگوپادھیائے نے ایک روز قبل ہی اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔ جسٹس ابھیجیت گنگوپادھیائے منگل کی صبح ہائی کورٹ میں چیمبر پہنچے، جس کے بعد ان کی جانب سے استعفیٰ بھیجا گیا۔ ذرائع نے بتایا کہ جسٹس گنگوپادھیائے نے اپنا استعفیٰ صدر دروپدی مرمو کو بھیجا اور اس کی کاپیاں چیف جسٹس آف انڈیا (سی جے آئی) ڈی وائی چندرچوڑ اور کلکتہ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس ٹی ایس شیوگیانم کو بھیجیں۔

جسٹس ابھیجیت گنگوپادھیائے نے گزشتہ روز کہا تھا کہ انہوں نے بطور جج اپنا کام مکمل کر لیا ہے، کیونکہ کچھ وکلاء اور مدعیان نے ان سے جج کے عہدے سے استعفیٰ دینے کے فیصلے پر نظر ثانی کرنے کی درخواست کی تھی۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ جسٹس ابھیجیت گنگوپادھیائے کو تملوک لوک سبھا سیٹ سے بی جے پی کا امیدوار بنایا جا سکتا ہے۔ ابھیجیت گنگوپادھیائے کو 2018 میں کلکتہ ہائی کورٹ میں جج کے طور پر مقرر کیا گیا تھا۔ جسٹس گنگوپادھیائے نے کلکتہ کے کالج سے قانون کی تعلیم حاصل کی ہے۔ وہ اسٹیٹ سول سروس کے افسر بھی رہ چکے ہیں۔

Follow us on Google News
Jadeed Bharat
www.jadeedbharat.com – The site publishes reliable news from around the world to the public, the website presents timely news on politics, views, commentary, campus, business, sports, entertainment, technology and world news.