National

ہندو سینا نے ’بابر روڈ‘ کا نام بدل کر ’ایودھیا مارگ‘ کر دیا، خبر ملی تو دہلی پولیس نے اسٹیکر نوچ ڈالا!

121views

ایودھیا میں 22 جنوری کو رام مندر کی پران پرتشٹھا ہونے والی ہے اور اس سے پہلے پورے ملک میں بڑا ہندو طبقہ جشن کی تیاریاں کر رہا ہے۔ حالانکہ ہندو طبقہ میں کچھ ایسے گروہ بھی ہیں جو 22 جنوری کو پران پرتشٹھا تقریب منقعد کیے جانے پر اعتراض ظاہر کر رہے ہیں۔ لیکن ہندوتوا بریگیڈ تو پورے ملک میں کچھ الگ ہی ماحول بنانے پر آمادہ ہیں۔ اس کا نظارہ آج دہلی میں دیکھنے کو ملا جب بابر روڈ پر لگے ایک بورڈ میں ہندو سینا کارکنان نے ’ایودھیا مارگ‘ کا اسٹیکر چسپاں کر دیا۔

Hindu Sena activists put a sticker of ‘Ayodhya Marg’ on Babar Road in Delhi. pic.twitter.com/3gTKO5ZqHA

— ANI (@ANI) January 20, 2024

میڈیا رپورٹس کے مطابق ہفتہ کی صبح نئی دہلی میں ہندو سینا کارکنان نے بابر روڈ کا نام بدل کر ایودھیا مارگ کر دیا۔ ہندو سینا کے لوگوں نے ہوٹل للت کے باہر لگے بورڈ پر ’ایودھیا مارگ‘ کا بھگوا اسٹیکر لگا دیا۔ جب اس کی خبر ملی تو دہلی پولیس موقع پر پہنچی اور ’ایودھیا مارگ‘ لکھا ہوا اسٹیکر نوچ کر ہٹا دیا۔ مشہور فیکٹ چیکر محمد زبیر نے اسٹیکر ہٹائے جانے کی ویڈیو اپنے ’ایکس‘ ہینڈ پر شیئر کی ہے۔

Hindu Sena workers put stickers of ‘Ayodhya Marg’ on the board of ‘Babar Road’ in Delhi…

Later Delhi Police removed this poster.. #BabriMasjid pic.twitter.com/qAxyP0xaXB

— Muhammad Zubair ᴾᵃʳᵒᵈʸ (@MhdZubair_) January 20, 2024

ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ہندو سینا کارکنان ’بابر روڈ‘ کا نام اس لیے بدلنا چاہتے ہیں کیونکہ سپریم کورٹ کے حکم کے بعد بابر کے بنائے گئے ڈھانچہ (بابری مسجد) کو ختم کر دیا گیا۔ ان کا کہنا ہے کہ جب سپریم کورٹ کا حکم صادر ہونے کے بعد ایودھیا میں بابر کا متنازعہ ڈھانچہ (بابری مسجد) نہیں رہا، تو پھر دہلی میں ’بابر روڈ‘ بھی نہیں ہونا چاہیے۔ انھوں نے بابر روڈ کا نام بدلنے کا مطالبہ بھی کیا۔

Delhi’s Babar Road signage defaced by Hindu Sena activists, ‘Ayodhya Marg’ posters placed ⚡⚡

Hindu Sena said “When Babar’s disputed structure is no more in Ayodhya after the order of the Supreme Court, then what is the function of Babar Road in Delhi?”

They demand “The name… pic.twitter.com/1EY6vOznhF

— Times Algebra (@TimesAlgebraIND) January 20, 2024

قابل ذکر ہے کہ کئی مواقع پر دہلی کی اس سڑک کا نام بدلنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ بی جے پی لیڈر وجئے گویل نے بھی ایک بار دہلی میں ’بابر روڈ‘ کا نام بدلنے کا مطالبہ کیا تھا۔ انھوں نے کہا تھا کہ بابر نے ہندوستان پر حملہ کیا اور ایودھیا میں رام مندر کو منہدم کر دیا تھا۔ اس لیے بھومی پوجن سے پہلے سڑک کا نام بدل کر ’5 اگست مارگ‘ رکھا جانا چاہیے۔ حالانکہ ان کا یہ مطالبہ رام جنم بھومی پوجن کے وقت پورا نہیں ہوا اور اب بھی سڑک کا نام بابر روڈ ہی ہے۔

Follow us on Google News