National

لوک سبھا انتخابات کے لیے بی ایس پی نے اپنے 16 امیدواروں کی فہرست جاری کی

74views

لوک سبھا انتخابت کی تیاریوں کے درمیان جہاں تمام سیاسی پارٹیاں اپنے اپنے امیدواروں کے ناموں کا اعلان کر رہی ہیں، وہیں بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) نے بھی آج اپنی پہلی فہرست جاری کر دی ہے۔ اس فہرست میں اس نے اتر پردیش کی 16 لوک سبھا سیٹوں کے لیے اپنے امیدواروں کے ناموں کا اعلان کیا ہے۔ ان 16 امیدواروں میں سے 7 امیدوار مسلمان ہیں۔

بی ایس پی نے سہارنپور سے ماجد علی، کیرانہ سے شریپال سنگھ، مظفر نگر سے دارا سنگھ پرجاپتی، بجنور سے وجیندر سنگھ، نگینہ سے سریندر پال سنگھ، مرادآباد سے محمد عرفان سیفی، رام پور سے ذیشان خان، سنبھل سے شولت علی، امروہہ سے مجاہد حسین، میرٹھ سے دیو ورت تیاگی، باغپت سے پروین بنسل، گوتم بدھ نگر سے راجندر سنگھ سولنکی، بلند شہر سے گریش چندر جاٹو، آنولا سے عابد علی، پیلی بھیت سے انیس احمد الیاس خان عرف پھول بابو اور شاہجہاں پور سے ڈاکٹر دودرام ورما کو اپنا امیدوار بنایا ہے۔

دراصل اس بار بی ایس پی ریاست میں اکیلے الیکشن لڑ رہی ہے۔ ریاست میں بی ایس پی کا مقابلہ انڈیا الائنس اور این ڈی اے اتحاد سے ہے۔ کہا جا رہا ہے کہ اپنا دل کمیراوادی کے ساتھ بی ایس پی کی اتحاد کی بات چیت چل رہی ہے، مگر ابھی تک اس ضمن میں دونوں جانب سے کوئی بیان سامنے نہیں آیا ہے۔ گزشتہ دنوں ہی بی ایس پی کی قومی صدر مایاوتی نے 2024 کے لوک سبھا انتخابات میں تنہا لڑنے کے اپنے پرانے موقف کو دہرایا تھا۔ اس وقت انہوں نے انتخابی اتحاد یا تیسرے محاذ کی باتوں کو افواہ قرار دیا تھا۔

مایاوتی نے کہا تھا کہ بہوجن سماج کے مفاد میں اکیلے الیکشن لڑنے کا بی ایس پی کا فیصلہ پختہ ہے۔ بی ایس پی پوری تیاری اور طاقت کے ساتھ ملک میں لوک سبھا کے عام انتخابات اکیلے لڑ رہی ہے۔ ایسے میں انتخابی اتحاد یا تیسرا محاذ بنانے کی افواہیں پھیلانا سراسر غلط خبر ہے۔

Follow us on Google News
Jadeed Bharat
www.jadeedbharat.com – The site publishes reliable news from around the world to the public, the website presents timely news on politics, views, commentary, campus, business, sports, entertainment, technology and world news.