National

ہائی کورٹ عوامی نمائندوں کے خلاف مقدمات کی نگرانی کے لیے خصوصی بینچ تشکیل دیں: سپریم کورٹ

95views

نئی دہلی: ایک اہم فیصلے میں، سپریم کورٹ نے جمعرات کو تمام ہائی کورٹس کو ہدایت دی کہ وہ عوامی نمائندوں کے خلاف زیر التوا فوجداری مقدمات کی نگرانی کے لیے ایک خصوصی بنچ تشکیل دیں اور سوموٹو مقدمات درج کریں، تاکہ ان کے جلد نمٹانے کو یقینی بنایا جا سکے۔ چیف جسٹس ڈی وائی چندرچوڑ کی زیرقیادت بنچ نے عوامی نمائندوں کے خلاف زیر التواء فوجداری مقدمات کو تیزی سے نمٹانے کے لیے اشونی اپادھیائے کی طرف سے دائر مفاد عامہ کی درخواست پر ہائی کورٹس اور نچلی عدالتوں کو کئی ہدایات جاری کیے

عدالت عظمیٰ نے کہا کہ عوامی نمائندوں کے خلاف زیر التوا مقدمات کو تیزی سے نمٹانے کے لیے نچلی عدالتوں کو یکساں رہنما خطوط دینا اس کے لیے مشکل ہوگا۔ سپریم کورٹ کے فیصلے میں کہا گیا ہے کہ ہائی کورٹ قانون سازوں کے خلاف فوجداری مقدمات کی نگرانی کے لیے ایک خصوصی بنچ تشکیل دے گی، جس کی سربراہی یا تو چیف جسٹس کریں گے یا پھر ان (چیف جسٹس) کی طرف سے نامزد کردہ بنچ کریں گے۔

سپریم کورٹ نے کہا کہ ہائی کورٹس فوجداری مقدمات میں عوامی نمائندوں کے خلاف مقدمات پر خصوصی نچلی عدالتوں سے اسٹیٹس رپورٹس طلب کرسکتی ہیں۔ اس میں کہا گیا ہے، ‘مقدمات کی سماعت کرنے والی عدالتیں اراکین پارلیمنٹ، ارکان اسمبلی اور قانون ساز کونسل کے اراکین کے خلاف مقدمات کی سماعت کو غیر معمولی اور مجبوری وجوہات کے علاوہ ملتوی نہیں کریں گی۔’ فیصلہ سناتے ہوئے چیف جسٹس نے کہا کہ پرنسپل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج عوامی نمائندوں سے متعلق مقدمات کی سماعت کرنے والی نامزد خصوصی عدالتوں کے لیے مناسب انفراسٹرکچر اور تکنیکی سہولیات کو یقینی بنائیں گے۔

Follow us on Google News
Jadeed Bharat
www.jadeedbharat.com – The site publishes reliable news from around the world to the public, the website presents timely news on politics, views, commentary, campus, business, sports, entertainment, technology and world news.