International

حماس کے اقدامات فلسطینی قوم کی نمائندگی نہیں کرتے: محمود عباس

188views

فلسطینی صدر محمود عباس نے اتوار کے روز کہا ہے کہ حماس کی پالیسیاں اور اقدامات “فلسطینی عوام کی نمائندگی نہیں کرتے”۔

محمود عباس نے اتوار کی رات وینزویلا کے صدر نکولس مادورو سے فون پر گفتگو میں کہا کہ فلسطین لبریشن آرگنائزیشن کی پالیسیاں اور پروگرام فلسطینی عوام کی نمائندگی کرتے ہیں۔

یہ پہلا موقع ہے جب صدر عباس نے اس طرح کے بیانات دیئے ہیں۔ یہ بیانات سات اکتوبر کے بعد غزہ کے محاذ پر شروع ہونے والی جنگ کے تناظر میں دیے گئے ہیں۔ فلسطینی مزاحمت کاروں کےحملوں میں اب تک 1500 اسرائیلی ہلاک جب کی تین ہزار کے قریب فلسطینی شہید ہوچکے ہیں۔

اسرائیلی جارحیت کے نتیجے میں 9000 سے زائد زخمی ہیں جن میں زیادہ تر بچے اور خواتین ہیں۔

محمود عباس نے گذشتہ جمعے کو عمان میں امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن کے ساتھ ملاقات سے قبل دونوں جانب سے شہریوں کے قتل کی مذمت کی تھی۔

وینزویلا کے صدر کے ساتھ فون پر بات کرتے ہوئے محمود عباس نے غزہ کی پٹی کے باشندوں کو بے گھر کرنے کو فلسطینی قوم کی دوسری ’نکبہ‘ قرار دیا۔

اس موقعے پر صدر محمود عباس نے “دونوں طرف سے شہریوں کے قتل کو مسترد کرتے ہوئے حملے روکنے کا مطالبہ کیا تھا۔

فلسطینی خبر رساں ایجنسی ’وفا‘ کی طرف سے شائع کردہ بیان کے مطابق محمود عباس نے کہا کہ فلسطینیوں کو اپنے اہداف کے حصول کے لیے تشدد ترک کرکے بین الاقوامی قانونی اور معاہدوں پر عمل درآمد کرانے پر زور دیا تھا۔

فون پر گفتگو کرتے ہوئے محمود عباس نے غزہ میں فلسطینی عوام کے خلاف “اسرائیلی جارحیت روکنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے غزہ کی ناکہ بندی فوری ختم کرنےکا مطالبہ کیا۔

دوسری طرف وینزویلا کے صدر نےفلسطینی قوم کے حق خود ارادیت کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ ظلم کے خلاف وینزویلا فلسطینی قوم کے ساتھ ہے۔

مادورو نے اسرائیل کی طرف سے شہری آبادی کے خلاف شروع کیے گئے اندھا دھند حملوں کی مذمت کی جس میں ہزاروں افراد لقمہ اجل بن چکےہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسرائی فلسطینیوں کے خلاف کارروائیوں میں بین الاقوامی قوانین اور انسانی حقوق کی حدود کو پامال کررہا ہے۔

Follow us on Google News
Jadeed Bharat
www.jadeedbharat.com – The site publishes reliable news from around the world to the public, the website presents timely news on politics, views, commentary, campus, business, sports, entertainment, technology and world news.