National

سپریم کورٹ کا رام دیو اور اچاریہ بال کرشن کو عدالت کے روبرو پیش ہونے کا حکم

91views

سپریم کورٹ نے آیورویدک کمپنی پتنجلی آیوروید کے گمراہ کن اشتہارات کے معاملے میں سماعت کرتے ہوئے رام دیو اور اچاریہ بال کرشن کوعدالت کے روبرو حاضر ہونے کا حکم دیا ہے۔ اسی کے ساتھ عدالت نے یہ بھی پوچھا ہے کہ ان کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کیوں نہ شروع کی جائے؟

سماعت کے دوران عدالت نے رام دیو کے وکیل مکل روہتگی سے پوچھا کہ آپ نے ابھی تک جواب داخل کیوں نہیں کیا؟ اب ہم آپ کے مؤکل سے عدالت میں حاضر ہونے کو کہیں گے۔ ہم رام دیو کو بھی پارٹی بنائیں گے۔ رام دیو اور آچاریہ بال کرشن دونوں کو عدالت میں حاضر ہونا پڑے گا۔ عدالت نے کہا کہ یہ بات بالکل واضح ہے کہ ہم کیس کی سماعت ملتوی نہیں کریں گے۔ اس کے ساتھ ہی عدالت نے مرکزی وزارت آیوش کو بھی پھٹکار لگائی اور پوچھا کہ اس نے ایک دن پہلے جواب کیوں داخل کیا؟

سپریم کورٹ نے کہا کہ پتنجلی کے منیجنگ ڈائریکٹر کو اگلی سماعت پر عدالت میں حاضر ہونا پڑے گا۔ اس کے ساتھ ہی عدالت نے رام دیو کو نوٹس جاری کرتے ہوئے پوچھا کہ کیوں نہ ان کے خلاف توہین عدالت کا مقدمہ چلایا جائے۔ سپریم کورٹ نے اس سے پہلے گمراہ کن اشتہارات کے معاملے میں پتنجلی آیوروید کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کیا تھا۔ پتنجلی آیوروید کے علاوہ آچاریہ بالکرشن کو بھی نوٹس دیا گیا تھا، جس میں انہیں تین ہفتوں کے اندر اپنا جواب داخل کرنے کو کہا گیا تھا۔ لیکن اس کا جواب نہیں دیا گیا۔

واضح رہے کہ سپریم کورٹ اس سے قبل پتنجلی کی مصنوعات پر بھی اپنا اعتراض ظاہر کرچکا ہے۔ جسٹس ہیما کوہلی اور جسٹس اے امان اللہ کی بنچ نے پہلے کے احکامات پر عمل نہ کرنے پر انہیں تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔ گزشتہ سال عدالت نے کمپنی کو اشتہارات پر پابندی لگانے کا حکم دیا تھا۔ نومبر کے مہینے میں ہی عدالت نے پتنجلی سے کہا تھا کہ اگر حکم کی تعمیل نہیں کی گئی تو تحقیقات کے بعد کمپنی کی تمام مصنوعات پر ایک ایک کروڑ روپے کا جرمانہ عائد کیا جائے گا۔

دراصل انڈین میڈیکل ایسوسی ایشن (آئی ایم اے) نے سپریم کورٹ میں پتنجلی آیوروید کے اشتہارات کو گمراہ کن قرار دیتے ہوئے ان پر روک لگانے کی عرضداشت داخل کی تھی۔ اپنی عرضداشت میں آئی ایم اے نے کہا تھا کہ پتنجلی نے کوویڈ 19 ویکسینیشن کے حوالے سے ایک مہم چلائی تھی جس میں گمراہ کن دعوے کیے گئے تھے۔ اس پرعدالت نے پتنجلی آیوروید کے جھوٹے اور گمراہ کن اشتہارات کو فوری طور پر روک لگانے کا حکم دیا تھا۔ انڈین میڈیکل ایسوسی ایشن کی طرف سے دائرعرضداشت میں کہا گیا تھا کہ پتنجلی کے گمراہ کن اشتہارات کی وجہ سے ایلوپیتھی ادویات کو نظر انداز کیا جا رہا ہے۔

Follow us on Google News
Jadeed Bharat
www.jadeedbharat.com – The site publishes reliable news from around the world to the public, the website presents timely news on politics, views, commentary, campus, business, sports, entertainment, technology and world news.