National

پانچ ستونوں پر مبنی ہے ہماری ’انصاف کی لڑائی‘، راہل گاندھی نے پریس کانفرنس میں ’رام لہر‘ پر بھی کیا اظہارِ خیال

149views

بھارت جوڑو نیائے یاترا کے دوران آسام میں ایک پریس کانفرنس میں کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے کانگریس پارٹی کی نیائے یاترا کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ ہماری نیائے کی لڑائی پانچ ستونوں پر مبنی ہے۔ وہ ستون ہیں یووا (نوجوان) نیائے، حصہ داری نیائے، ناری (خواتین) نیائے، کسان نیائے اور مزدور نیائے۔ یہی وہ پانچ ستون ہیں جو ملک کو طاقت دیں گے اور انہی ستونوں کو مضبوط کرنے کے لیے کانگریس پارٹی ایک پروگرام بہت جلد ملک کے سامنے پیش کرے گی۔

تلنگانہ کے وزیر اعلیٰ نے آسام میں راہل گاندھی کی ’بھارت جوڑو نیائے یاترا‘ پر حملہ کی مذمت کی

हमारी ‘न्याय की लड़ाई’ के 5 स्तंभ हैं:

1. युवा न्याय
2. भागीदारी न्याय
3. ⁠⁠नारी न्याय
4. किसान न्याय
5. श्रमिक न्याय#PaanchNYAYpic.twitter.com/kIGkpd0HZ6

— Congress (@INCIndia) January 23, 2024

واضح رہے کہ راہل گاندھی کی نیائے یاترا فی الوقت آسام کے بارپیٹا سے گزر رہی ہے اور اسی مقام پر انہوں نے میڈیا کے نمائندوں سے بات کی۔ راہل گاندھی نے کہا کہ اس نیائے یاترا کے پیچھے نیائے کا آئیڈیا ہے اور اس میں ہمارے پانچ ستون ہیں جو ملک کو طاقت دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ’’جب بھی لوگوں سے بات کرتا ہوں تو یہی بات سامنے آتی ہے کہ ریاست میں بیروزگاری، بدعنوانی اور مہنگائی عروج پر ہے۔ ہر کوئی اسی کی شکایت کرتا ہے۔ کسان پریشان ہیں اور نوجوانوں کو ملازمت نہیں مل رہی ہے۔‘‘ راہل گاندھی نے مزید کہا کہ ’’ہم انہی مسئلوں کو اٹھا رہے ہیں اور ہمیں کامیابی بھی مل رہی ہے۔‘‘

بھارت جوڑو نیائے یاترا کو گوہاٹی میں داخل ہونے سے روکا گیا، کانگریس کارکنان کا شدید احتجاج، رکاوٹیں توڑ ڈالیں

कुछ भी करो.. बुरा-भला कहो, परेशान करो, लेकिन मैं पीछे नहीं हटूंगा।

मैं सच्चाई के लिए लड़ता रहूंगा।

चाहे पूरी दुनिया मेरे खिलाफ खड़ी हो जाए, मुझे फर्क नहीं पड़ता।

एक बार मैंने मन बना लिया, तो मेरी विचारधारा के लिए लड़ने से मुझे कोई नहीं रोक सकता

: @RahulGandhi जी

असम pic.twitter.com/eJ6027nQu1

— Congress (@INCIndia) January 23, 2024

راہل گاندھی نے اس موقع پر آسام کے وزیراعلیٰ سے متعلق پوچھے گئے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ’’وہ کسی کو بھی ڈرا سکتے ہیں لیکن کانگریس پارٹی کو نہیں ڈرا سکتے کیونکہ کانگریس پارٹی ڈرنے والی نہیں ہے۔ وہ میرے اوپر کیس لگا سکتے ہیں، کیونکہ ان کے دل میں ڈر ہے۔ وہ ڈرے ہوئے ہیں کہ آسام  کی عوام کانگریس کے ساتھ کھڑی ہے۔ آسام کے وزیر اعلیٰ کا صرف ایک ہی  کام ہے، نفرت پھیلانا، ایک دھرم کو دوسرے دھرم سے لڑانا، ایک زبان کو دوسری زبان سے لڑانا۔ وہ یاترا کی جس قدر مخالفت کررہے ہیں، یاترا کا اتنا ہی فائدہ ہو رہا ہے۔ جو تشہیر ہمیں نہیں ملتی وہ آسام کے وزیراعلیٰ اور امت شاہ کے ذریعے ہمیں مل رہی ہے۔‘‘ راہل گاندھی نے مزید کہا کہ ’’مندر جانے سے روکنا، کالج جانے سے روکنا یا پد یاترا روکنا یہ تو ان کی خوفزدہ کرنے کی ٹیکٹس ہے لیکن ہم ڈرتے نہیں ہیں۔ نیائے یاترا گاؤں گاؤں تک جا رہی ہے۔ لوگ بھی پوچھ رہے ہیں کہ آخر راہل گاندھی کو روکا کیوں جا رہا ہے۔‘‘

آندھرا پردیش: کانگریس کو مضبوط کر نے کے لیے ریاستی صدر کا ریاست گیر دورہ

असम के मुख्यमंत्री यात्रा के खिलाफ जो भी कर रहे हैं, इससे यात्रा को फायदा हो रहा है।

असम में मुख्य मुद्दा अब ‘भारत जोड़ो न्याय यात्रा’ बन गई है। हमारी यात्रा का संदेश गांवों तक पहुंच रहा है।

जनता देख रही है कि राहुल गांधी को मंदिर जाने से रोका जा रहा है, छात्रों से बात करने से… pic.twitter.com/UgAutREIDb

— Congress (@INCIndia) January 23, 2024

راہل گاندھی نے کہا کہ ’’بی جے پی جب یاترا میں رکاوٹ ڈالتی ہے  تو اس سے وہ یاترا کی مدد ہی کررہی ہوتی ہے۔‘‘ انہوں نے کہا کہ ’’میں چاہتا ہوں کہ یاترا کو روکا جائے۔ ہمیں کالج میں جانے سے روکیں۔ کالج میں جانے سے روکا تو پورا کالج باہر آگیا، تمام طلبہ نے ہمیں سنا اور ملک نے سنا۔ جو بھی اس یاترا میں آنا چاہتا ہے آسکتا ہے۔ انڈیا الائنس کی پارٹیوں کو بھی بلایا گیا ہے اور سب کو مدعو بھی کیا گیا ہے۔ اگر وہ آتے ہیں تو ہمیں اچھا لگے گا۔‘‘

بھارت جوڑو نیائے یاترا آسام سے نکل کر میگھالیہ کی سرحد میں داخل

LIVE: Press briefing by Shri @RahulGandhi in Assam. #BharatJodoNyayYatra https://t.co/oRo5TTsLu4

— Congress (@INCIndia) January 23, 2024

رام مندر کے پران پرتشٹھا اور رام لہر سے متعلق پوچھے گئے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے راہل گاندھی نے کہا کہ ’’پران پرتشٹھا کا پروگرام دراصل بی جے پی کا سیاسی پروگرام تھا۔ رہی بات رام لہر کی تو ایسی کوئی لہر نہیں ہے۔ ہمارا پانچ نیائے کا پلان ہے اور یہ ملک کو مضبوط بنانے کا پلان ہے۔‘‘ واضح رہے کہ آسام میں راہل گاندھی کی نیائے یاترا کو روکنے کی بھرپور کوشش کی جا رہی ہے، اسی کے تحت یاترا پر حملے بھی ہوئے اور راہل گاندھی کے خلاف مقدمہ بھی درج کرایا گیا ہے۔

Follow us on Google News