National

’ہمارے 200 سے 300 کروڑ روپے روک دیں گے تو غیر جانبدارانہ الیکشن کس طرح ہوگا؟‘ کانگریس صدر کھڑگے کا سوال

102views

لوک سبھا انتخاب سے قبل جس طرح سے کانگریس کے بینک اکاؤنٹس فریز کر دیے گئے ہیں، اس تعلق سے پارٹی صدر ملکارجن کھڑگے نے آج کچھ سوال اٹھائے ہیں۔ کھڑگے نے بدھ کے روز کہا کہ پارٹی پیسے کی کمی کا سامنا کر رہی ہے اور اس سے انتخابی ماحول میں مسائل پیدا ہوں گے۔ انھوں نے الزام لگایا کہ جن بینک اکاؤنٹس میں لوگوں کے ذریعہ عطیہ کردہ پیسہ رکھا گیا تھا، اسے بی جے پی کی قیادت والی این ڈی اے حکومت نے فریز کر دیا ہے۔ انھوں نے یہ سوال اٹھایا کہ جب ہمارے پاس انتخاب لڑنے کے لیے پیسے ہی نہیں ہوں گے، پھر یہ انتخاب غیر جانبدارانہ کیسے رہ جائے گا؟

ملکارجن کھڑگے نے کرناٹک کے کلبرگی میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ کانگریس پارٹی کا اکاؤنٹ بند کر دیا گیا ہے۔ اگر ہمارے 200 سے 300 کروڑ روپے روک دیے جائیں گے تو پھر ہم انتخاب کس طرح لڑ پائیں گے۔ کھڑگے کے مطابق کانگریس کے چار اکاؤنٹس ہیں، یوتھ کانگریس، مہیلا کانگریس، دہلی اور اے آئی سی سی۔ انھوں نے مطلع کیا کہ ’’اگر سبھی اکاؤنٹس بند ہو گئے ہیں، تو کیا یہ غیر جانبدارانہ انتخاب ہے؟‘‘

واضح رہے کہ کانگریس کے سبھی اکاؤنٹس انکم ٹیکس محکمہ نے فریز کر دیے ہیں۔ یوتھ کانگریس کے بینک اکاؤنٹس بھی فریز کر دیے گئے ہیں۔ انکم ٹیکس محکمہ نے کانگریس سے 210 کروڑ روپے کی ریکوری مانگی ہے۔ 19-2018 کے انکم ٹیکس فائلنگ کو بنیاد بنا کر آئی ٹی محکمہ کی طرف سے کروڑوں روپے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

Follow us on Google News
Jadeed Bharat
www.jadeedbharat.com – The site publishes reliable news from around the world to the public, the website presents timely news on politics, views, commentary, campus, business, sports, entertainment, technology and world news.